Can't connect right now! retry

پاکستان
12 جنوری ، 2021

’تین افراد نے مجھے پکڑا اور کہا گاڑی چاہیے، ملزمان مجھے اسلحہ دکھا چکے تھے‘

سابق ہاکی اولمپیئن اصلاح الدین کے ساتھ ڈکیتی کی واردات ہوئی ہے اور تین مسلح افراد نے انہیں گاڑی میں یرغمال بناکر لوٹ لیا۔

اصلاح الدین نے اپنے ساتھ پیش آنے والے واقعے سے متعلق بتایا کہ ’تین مسلح افراد نے یرغمال بناکر15 ہزارروپے اورموبائل لوٹ لیا،گلستان جوہرمیں ملزمان اچانک میری کار میں بیٹھ گئے، مجھے ایک گھنٹہ یرغمال بنائے رکھا،صفوراچورنگی پر چھوڑ کر کار ساتھ لے گئے‘۔

اصلاح الدین نے بتایا کہ گلستان جوہرتھانے میں رپورٹ درج کرانے آیا ہوں۔ خیال رہے کہ اصلاح الدین اولمپیئن احمدعالم کی والدہ کے جنازے میں شرکت کے بعد واپس گھر جارہے تھے۔

اس حوالے سے پولیس کا کہنا ہے کہ سابق اولمپیئن اصلاح الدین کو اغواء نہیں کیا گیا ،گلستان جوہر بلاک 16 میں ملزمان گاڑی چھین کر فرارہوگئے، ملزمان جاتے ہوئے اصلاح الدین کا پرس بھی لے گئے، واقعے سے متعلق اے وی ایل سی کو آگاہ کردیا گیا ہے، جائے وقوع سے سی سی ٹی وی فوٹیج حاصل کی جاری ہیں۔

مقدمہ درج

گلستان جوہر سے اولمپیئن اصلاح الدین کی گاڑی چھیننے کا مقدمہ درج کرلیا گیا۔ واقعے کا مقدمہ اولمپیئن اصلاح الدین کی مدعیت میں درج کیا گیا، مقدمہ گلستان جوہر تھانے میں نامعلوم افراد کیخلاف درج کیا گیا۔

تین افرادنےمجھے پکڑا اور کہا گاڑی چاہیے، اصلاح الدین

ہاکی اولمپیئن اصلاح الدین نے تھانے کے باہر میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ تین افراد نے مجھے پکڑا اور کہا گاڑی چاہیے، ملزمان مجھے اسلحہ دکھا چکے تھے، مجھے کہا آپ لیٹے رہیں۔

اصلاح الدین نے کہا کہ ملزمان نے گاڑی میں ٹریکر لگا ہونے کا پوچھ کر مجھے چھوڑ دیا، ملزمان گاڑی، 15 ہزار روپے اور گھڑی لےکر فرار ہوگئے۔

اصلاح الدین نے کہا کہ وزیر اعلیٰ مراد علی شاہ نے میری خیریت معلوم کی، ہمارا ملک اور شہر بہت اچھا ہے، ایسے واقعات ہر جگہ ہوتے رہتے ہیں، اسپورٹس کے لوگ امن پسند ہوتے ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM