دنیا
05 دسمبر ، 2021

سابق افغان سکیورٹی اہلکاروں کی ہلاکت اور گمشدگی پر امریکا اور یورپ کی طالبان پر تنقید

ہیومن رائٹس واچ کی ایک رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا تھا کہ طالبان نے افغان سکیورٹی فورسز کے سو سے زائد سابق اہلکاروں کو ہلاک کر دیا—فوٹو: رائٹرز/فائل
 ہیومن رائٹس واچ کی ایک رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا تھا کہ طالبان نے افغان سکیورٹی فورسز کے سو سے زائد سابق اہلکاروں کو ہلاک کر دیا—فوٹو: رائٹرز/فائل

افغانستان میں طالبان کے ہاتھوں سابق سکیورٹی اہلکاروں کی مبینہ ہلاکتوں کی اطلاعات پر  امریکا اور مغربی ممالک نے طالبان کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

امریکا سمیت یورپ نے بھی سابق اہلکاروں کی گمشدگی اور ہلاکتوں کی فوری تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔

غیر ملکی خبر  رساں ادارے کے مطابق یورپی یونین، برطانیہ، امریکا اور جاپان سمیت کئی ممالک نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ انسانی حقوق کی تنظیمیں سابق سکیورٹی اہلکاروں کی جبری گمشدگیاں اور ہلاکتیں رپورٹ کر رہی ہیں جس پر شدید تشویش ہے۔

بیان میں ان ممالک نے مؤقف اختیار کیا کہ ہم اس بات پر  زور دیتے ہیں کہ یہ کارروائی انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے اور  یہ طالبان کی جانب سے عام معافی کے اعلان کے برعکس ہے۔

واضح رہے کہ بین الاقوامی تنظیم ہیومن رائٹس واچ کی جانب سے ایک رپورٹ پیش کی گئی تھی جس میں دعویٰ کیا گیا تھا کہ طالبان نے افغان سکیورٹی فورسز کے 100 سے زائد سابق اہلکاروں کو ہلاک اور جبری طور پر لاپتہ کیا تھا۔

رپورٹ میں یہ بھی بتایا تھا کہ ان سابق اہلکاروں کے خاندانوں کو بھی ہدف بنایا جا رہا ہے۔

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM