کاروبار
14 مئی ، 2022

نئی حکومت بھی مہنگائی روکنے میں ناکام، ادارہ شماریات نے ہفتہ وار رپورٹ جاری کردی

ملک میں مہنگائی کی مجموعی شرح 15.85 فیصد ہوگئی ۔—فوٹو: فائل
ملک میں مہنگائی کی مجموعی شرح 15.85 فیصد ہوگئی ۔—فوٹو: فائل

ملک بھر میں رواں ماہ کے دوسرے ہفتے میں مہنگائی ہوئی، ادارہ شماریات نے ہفتہ وار  کے اعدادوشمار جاری کردیے۔

ادارہ شماریات کی رپورٹ کے مطابق نئی حکومت بھی مہنگائی روکنے میں ناکام ، ایک ہفتے میں 20 کلو آٹے کا تھیلا 403 روپے 85 پیسے، زندہ مرغی34 روپے اور مٹن 21 روپے اور بیف 3 روپے 50 پیسے فی کلو مہنگا ہوا۔

اس کے علاوہ دالیں ،گھی اورچاول سمیت 28 دیگر اشیاء کی قیمتیں بھی بڑھ گئی ،ملک میں مہنگائی کی مجموعی شرح 15.85 فیصد ہوگئی۔

ادارہ شماریات کی مہنگائی سے متعلق ہفتہ وار رپورٹ  کے مطابق  پیاز 3 روپے 37 پیسے اور آلو 2 روپے 46 پیسے فی کلو مہنگے ہوئے جبکہ ایک ہفتے میں انڈے بھی7روپے 16 پیسے فی درجن مہنگے ہوئے ۔

اس کے علاوہ دال مسور 10 روپے 80 پیسے، دال چنا 3 روپے 80 پیسے ،دال ماش 5 روپے 59 پیسے دال، مونگ ایک روپے 62 پیسے فی کلو مہنگی ہوئی جبکہ چاول، لہسن, دودھ ، دہی،گھی اور خوردنی تیل کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوا۔

دوسری جانب ایک ہفتے میں 6 اشیائے ضروریات سستی ہوئیں ، ٹماٹر 9 روپے 68 پیسے فی کلو ، کیلے 7 روپے 52 پیسے فی درجن سستے ہوئے ۔

ادارہ شماریات کے مطابق حالیہ ہفتے 17 اشیاء کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM