پاکستان
06 اکتوبر ، 2022

امریکی سفیر کے دورہ آزاد کشمیر سے بھارتی میڈیا کو مروڑ اٹھنے لگے

مظفرآباد کے دورے کے دوران امریکی سفیر نے 2005 کے زلزلے کی یادگار پر پھول چڑھائے اور متاثرین کیلئے دعا کی— فوٹو: امریکی سفارتخانہ
مظفرآباد کے دورے کے دوران امریکی سفیر نے 2005 کے زلزلے کی یادگار پر پھول چڑھائے اور متاثرین کیلئے دعا کی— فوٹو: امریکی سفارتخانہ

پاکستان میں امریکی سفیر ڈونلڈ بلوم کے دورہ آزاد کشمیر پر بھارتی میڈیا کے پیٹ میں مروڑ اٹھنے لگے۔

پاکستان میں امریکی سفیر ڈونلڈ بلوم نے 2 سے 4 اکتوبر تک تین دن آزاد کشمیر کا دورہ کیا۔

آزاد کشمیر کے دورے کے دوران ڈونلڈ بلوم نے وزیراعظم آزاد کشمیر سردار تنویر الیاس، تعلیمی ماہرین، کاروباری اور ثقافتی شخصیات سمیت سول سوسائٹی کے نمائندوں سے ملاقاتیں کی۔

مظفرآباد کے دورے کے دوران امریکی سفیر نے 2005 کے زلزلے کی یادگار پر پھول چڑھائے اور متاثرین کیلئے دعا کی۔

اس موقع پر امریکی سفیر نے کہا کہ پاکستان اور امریکا کے 75 سالہ تعلقات کے دوران جب کبھی پاکستان کو ضرورت پڑی ہے امریکا پاکستان کی مدد کیلئے پیش پیش رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ 2005 کے زلزلے کے موقع پر بھی امریکا کی جانب سے رلیف اور بحالی کی مد میں پاکستان کی بھاری امداد کی گئی تھی اور امریکی افواج نے بھی امدادی سرگرمیوں کیلئے اپنا کردار ادا کیا تھا۔

امریکی سفیر کا کہنا تھا کہ دورے کا مقصد پاک امریکا تعلقات کا فروغ اور دونوں ملکوں کے گہرے اقتصادی، ثقافتی اور عوامی روابط کو اُجاگر کرنا ہے۔

ڈونلڈ بلوم نے آزاد کشمیر کو آزاد کشمیر کے نام سے پکارا، جس پر بھارتی میڈیا نے شور مچانا شروع کردیا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM