Can't connect right now! retry

پاکستان
27 دسمبر ، 2017

غیر قانونی سڑک کی تعمیر: نواز، شہباز شریف کیخلاف ریفرنس دائر کرنے کی منظوری


اسلام آباد: قومی احتساب بیورو (نیب) نے سابق وزیراعظم نواز شریف اور وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دے دی۔

نیب ایگزیکٹو بورڈ کا چیئرمین نیب جاوید اقبال کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس کے دوران یہ فیصلہ کیا گیا۔

نیب اعلامیے میں بتایا گیا کہ اجلاس میں 6 ریفرنسز دائر کرنے، چار انکوائریز اور 11 انویسٹی گیشن کی منظوری دی گئی۔

اعلامیے میں بتایا گیا کہ نواز شریف اور شہباز شریف نے مبینہ طور پر رائیونڈ سے شریف فیملی کے گھر تک سال 2000 میں غیر قانونی دو رویہ سڑک تعمیر کرکے قومی خزانے کو تقریباً ساڑھے 12 کروڑ روپے نقصان پہنچایا۔

نیب اعلامیے میں بتایا گیا کہ ایگزیکیٹیو بورڈ نے نندی پور الیکٹرک پراجیکٹ میں سابق وفاقی وزیر ڈاکٹر بابر اعوان، سابق وزیر پانی و بجلی راجہ پرویز اشرف، سابق سیکرٹری قانون و انصاف مسعود چشتی و دیگر کےخلاف تحقیقات کی منظور ری دی۔

ان پر مبینہ طور پر الزام ہے کہ انہوں نے نندی پور پن بجلی منصوبے میں تاخیر کی جس سے قومی خزانے کو 113 ارب روپے کا نقصان ہوا۔

اجلاس میں سابق چیئرمین پاکستان نمباکو بورڈ صاحبزادہ خالد کے خلاف بدعنوانی کا ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا گیا، ملزم پر اختیارات کے ناجائز استعمال کرتے ہوئے غیر قانونی بھرتیاں کیں جس سے قومی خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان پہنچایا۔

نیب ایگزیکیٹیو بورڈ نے سابق چیئرمین متروکہ وقف املاک آصف ہاشمی کیخلاف بدعنوانی ریفرنس دائر کرنے کی بھی منظوری دی جن پر بورڈ کے450 پلاٹوں کی غیرقانونی الاٹمنٹ کا الزام ہے۔

نیب اعلامیے میں بتایا گیا کہ سابق سیکریٹری لیبر سندھ نصرحیات کیخلاف بدعنوانی کا ریفرنس دائرکرنےکی بھی منظوری اجلاس کے دوران دی گئی۔

نیب اجلاس کے دوران سابق وزیراعلیٰ بلوچستان اسلم رئیسانی و دیگر کے خلاف تحقیقات کی بھی منظوری دی جن پر 1817 ملین روپے حکومت بلوچستان سے بطور معاوضہ وصول کرنے کا الزام ہے جو مبینہ طور پر انہوں نے اپنے رشتہ داروں میں تقسیم کی۔

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM