Can't connect right now! retry

کاروبار
08 مارچ ، 2020

ایف اے ٹی ایف سفارشات، ایف بی آر نے ڈاکٹروں کو نوٹس جاری کردیے

ایف اے ٹی ایف نے ڈاکٹروں اور وکلاء کی آمدن بھی ریگولیٹ کرنے کا مطالبہ کیا ہے: ذرائع— فوٹو:فائل 

فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) کی سفارشات پر عملدرآمد  کرتے ہوئے فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے جیولرز، پرائیویٹ پریکٹس کرنے والے ڈاکٹروں  اور   رئیل اسٹیٹ کے کاروبار کو ریگولیٹ کرنے کے لیے قوانین تیار کرنے شروع کر دیے ہیں۔

ذرائع کے مطابق جیولرز تمام ٹرانزیکشنز کا ریکارڈ ایف بی آر کو پیش کریں گے اور جیولرز کی ڈاکیومینٹیشن کے لیے نیا سسٹم متعارف کرایا جائے گا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ جیولرز کی تمام ٹرانزیکشنز کو مانیٹر کیا جائے گا، جیولرز مشکوک ٹرانزیکشنز کو ایف بی آر میں رپورٹ کریں گے جبکہ جیولرز کے ٹیکس ریٹرنز کے لیے خصوصی فارم بنایاجا رہا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ ان مجوزہ قوانین کا اطلاق ہاؤسنگ سوسائٹیز پر بھی ہوگا۔

ذرائع کے مطابق ایف اے ٹی ایف نے ڈاکٹروں اور وکلاء کی آمدن بھی ریگولیٹ کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ ایف بی آر نے ڈاکٹرز کو نوٹسز جاری کرنے کا سلسلہ شروع کردیا تاہم وکلاء کے حوالے سے ایف بی آر تاحال کوئی فیصلہ نہیں کرسکا۔

خیال رہے کہ گزشتہ ماہ فرانس کے دارالحکومت پیرس میں ہونے والے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے اجلاس میں پاکستان کو رواں سال جون تک گرے لسٹ میں ہی برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا تھا۔

اعلامیے میں کہا گیا تھا کہ پاکستان نے ایف اے ٹی ایف کے ایکشن پلان پر عملدرآمد پر خاطر خواہ پیشرفت کی اور اضافی 9 سفارشات پر عملدرآمد کیا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM