پاکستان
23 جون ، 2022

اسلام آباد میں مون سون کی غیر معمولی بارشوں کی پیش گوئی

اسلام آباد میں پچھلے سال موسلا دھار بارش سے اسلام آباد کے پوش علاقے ای الیون ٹو میں بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی، ماں اور بیٹا گھر کی بیسمنٹ میں پانی بھر جانے سے جاں بحق ہو گئے— فوٹو: فائل
اسلام آباد میں پچھلے سال موسلا دھار بارش سے اسلام آباد کے پوش علاقے ای الیون ٹو میں بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی، ماں اور بیٹا گھر کی بیسمنٹ میں پانی بھر جانے سے جاں بحق ہو گئے— فوٹو: فائل

اسلام آباد میں مون سون کی غیر معمولی بارشوں کی پیش گوئی کی گئی ہے، محکمہ موسمیات کے مطابق جولائی سے اگست تک موسلا دھار بارشیں ہو سکتی ہیں۔

اس حوالے سے وفاقی وزیر ماحولیاتی تبدیلی شیری رحمان نے خبردار کیا ہے کہ ملک میں 2010 کے تباہ کن سیلاب جیسی صورت حال بھی پیدا ہو سکتی ہے۔

ادھر ضلعی انتظامیہ کا دعویٰ ہے کہ ہنگامی صورت حال سے نمٹنے کی تیاری کر لی ہے  تاہم گزشتہ سال سیکٹر ای الیون ٹو میں نالے پر بنی جو تجاوزات ماں بیٹے کی ہلاکت اور املاک کی تباہی کا سبب بنیں وہ تو اب تک قائم ہیں۔

اسلام آباد میں پچھلے سال موسلا دھار بارش سے اسلام آباد کے پوش علاقے ای الیون ٹو میں بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی، ماں اور  بیٹا گھر کی بیسمنٹ میں پانی بھر جانے سے جاں بحق ہو گئے تاہم باقی تین بچوں کو بچا لیا گیا تھا۔ اس واقعے  کی وجہ تھی برساتی نالے پر ایک نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کی تجاوزات جس سے نالے کا راستہ اتنا تنگ ہو گیا کہ برساتی پانی اوور فلو ہو کر گھروں میں گھس گیا۔

وہ تجاوزات اب بھی قائم ہیں، نجی ہاؤسنگ سوسائٹی عدالت سے اسٹے آرڈر لے چکی ہے اور  مقامی رہائشی خوف زدہ ہیں۔

ڈی سی اسلام آباد عرفان میمن کا کہنا ہے کہ 100 ملی میٹر سے زیادہ بارش ہوئی تو نشیبی علاقوں کی بیسمینٹس کو سیل کردیا جائے گا، ضرورت پڑنے پر انہیں خالی بھی کرایا جاسکتا ہے۔

اسلام آباد انتظامیہ نالوں کی صفائی کا دعویٰ کررہی ہے لیکن صورت حال تسلی بخش دکھائی نہیں دے رہی ،برساتی نالوں میں کچرا اب بھی موجود ہے۔ 

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM