Can't connect right now! retry

دلچسپ و عجیب
13 فروری ، 2018

بھارت میں استاد کا انتخاب میرٹ کے بجائے ٹاس پر ہونے لگا

بھارتی ریاست پنجاب کے وزیر تعلیم نے سکہ اُچھال کر مکینیکل پروفیسر کا انتخاب کرڈالا۔

یوں تو اسکول ہو یا یونیورسٹی یار پھر کوئی انسٹیٹیوٹ کسی بھی تعلیمی ادارے میں استاد کا انتخاب ہمیشہ قابلیت اور میرٹ پر کیا جاتا ہے تاہم بھارت کا ایک اور منفی پہلو اُس وقت سامنے آیا جب استاد کا انتخاب میرٹ یا قابلیت کے بجائے قسمت پر کیا گیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی ریاست پنجاب کے وزیر فنی تعلیم چرنجیت سنگھ چھنی نے دو امیدواروں کے درمیان اُنکی قابلیت کی بنا پر فیصلہ کرنے کی بجائے سکہ اُچھال کر مکینیکل پروفیسر کے طور پر انتخاب کیا۔

بھارتی وزیر نے پٹیالہ کے کالج میں تقرری کے لیے 2 اساتذہ میں سے ایک کی تقرری کا فیصلہ ٹاس کرکے کیا جب کہ ان کے اس عمل نے نہ صرف بھارت کے پڑھے لکھے ہونے کے جھوٹے قول کا پول کھول دیا بلکہ وزراء کی نااہلی بھی ثابت کردی ہے۔

واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر تیزی سے وائرل ہوچکی ہے اور بھارت میں تعلیمی معیار پر ایک بار پھر کئی سوالات اُٹھ گئے ہیں۔

بھارتیہ جنتا پارٹی نے بھی کانگریس کے ریاستی وزیر کے عمل کی سخت مذمت کی ہے اور فی الفور برطرفی کا مطالبہ کیا ہے۔

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM