کے الیکٹرک کی اپیل مسترد، پی ایم ٹی سے زخمی شہری کو 92 لاکھ روپے ہرجانہ دینےکا حکم

فوٹو: فائل
فوٹو: فائل

ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج غربی کراچی نے  ہرجانے کے خلاف کے الیکٹرک کی سینئر  سول جج کے فیصلے کے خلاف اپیل مسترد کردی۔

ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج غربی نے شہری کو  ہرجانےکی رقم ادا کرنےکا حکم برقرار رکھا۔

عدالت نے غفلت برتنے  پرکے الیکٹرک کو  متاثرہ شہری عاصم امام کو  92 لاکھ روپے ہرجانےکا حکم دیا تھا۔

درخواست گزار کے وکیل عثمان فاروق کا موقف تھا کہ اورنگی ٹاؤن صادق آباد میں 15 نومبر 2018 کو  واقعہ پیش آیا جس میں  پی ایم ٹی کے الیکٹرک کی غفلت کے باعث گرگئی تھی، واقعے میں عاصم امام بری طرح زخمی ہوا تھا اور  اس کے جسم کےکئی حصے ناکارہ ہوگئے، عدالت سے استدعا ہےکہ کے الیکٹرک پر بھاری جرمانہ عائد کیا جائے۔

سینئر سول جج نے کے الیکٹرک کو پی ایم ٹی گرنے سے زخمی شخص کو 92 لاکھ روپے ہرجانہ ادا کرنےکا حکم دیا تھا۔

سول جج کے فیصلے کے خلاف کے الیکٹرک نے اپیل کی تھی جسےایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج غربی نے مسترد کردیا۔


مزید خبریں :