Can't connect right now! retry

پاکستان اسپورٹس بورڈ کا ملک کی موجودہ اسپورٹس پالیسی میں تبدیلی کا فیصلہ

اٹھارویں ترمیم کی روشنی میں موجودہ اسپورٹس پالیسی کا از سرنو جائزہ اور اس میں تبدیلی کی سفارشات کیلئے کمیٹی تشکیل دیدی گئی— فوٹو: فائل

پاکستان اسپورٹس بورڈ (پی ایس بی) نے ملک کی موجودہ اسپورٹس پالیسی میں تبدیلی کا فیصلہ کرلیا، اٹھارویں ترمیم کی روشنی میں موجودہ اسپورٹس پالیسی کا از سرنو جائزہ اور اس میں تبدیلی کی سفارشات کیلئے کمیٹی تشکیل دیدی گئی ہے۔

پاکستان اسپورٹس بورڈ کے ترجمان نے بتایا کہ پی ایس بی کی ایگزیکٹو کمیٹی کا اجلاس اسلام آباد میں بین الصوبائی رابطے کی وفاقی وزیر فہیمدا مرزا کی صدارت میں ہوا جس میں موجودہ اسپورٹس پالیسی پر تبادلہ خیال کیا گیا اور پالیسی کے جائزے کیلئے ایک کمیٹی تشکیل دی گئی جو اٹھارویں ترمیم کے تناظر میں پالیسی میں تبدیلی پر سفارشات مرتب کرکے ایک ماہ میں پی ایس بی کو جمع کرائے گی۔

کمیٹی کی سربراہی سیکرٹری بین الصوبائی رابطہ محمد علی شہزادہ کریں گے جبکہ دیگر اراکین میں ہائر ایجوکیشن کمیشن، پاکستان ٹینس فیڈریشن، ایک سابق ایتھلیٹ اور پی ایس بی کے قانونی مشیر شامل ہوں گے۔

واضح رہے کہ اٹھارویں آئینی ترمیم کے بعد کھیلوں کے معاملات صوبائی حکومتوں کے سپرد کردیے گئے تھے تاہم بین الاقوامی ایونٹس میں میڈلز حاصل کرنے والے ایتھلیٹس میں انعامی رقوم کی تقسیم کے معاملات میں پی ایس بی اور صوبائی اسپورٹس محکموں میں عدم اتفاق رہا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM