پاکستان
11 اگست ، 2022

خیبرپختونخوا میں نامعلوم گروہوں کی جانب سے بھتہ طلب کیے جانے کا انکشاف

بعض نامعلوم گروہوں کی جانب سے بھتہ طلب کیے جانے کی اطلاعات ملی ہیں البتہ ان واقعات میں کالعدم تحریک طالبان پاکستان ملوث نہیں: بیرسٹر سیف/ فائل فوٹو
بعض نامعلوم گروہوں کی جانب سے بھتہ طلب کیے جانے کی اطلاعات ملی ہیں البتہ ان واقعات میں کالعدم تحریک طالبان پاکستان ملوث نہیں: بیرسٹر سیف/ فائل فوٹو

پشاور: خیبرپختونخو ا میں نامعلوم گروہوں کی جانب سے بھتہ طلب کیے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے اطلاعات بیرسٹر سیف نے جیو نیوز کے پروگرام کیپیٹل ٹاک میں بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ بعض نامعلوم گروہوں کی جانب سے بھتہ طلب کیے جانے کی اطلاعات ملی ہیں البتہ ان واقعات میں کالعدم تحریک طالبان پاکستان ملوث نہیں۔

انہوں نے بتایا کہ طالبان کے مفتی نور ولی گروپ سے ہمارے مذاکرات جاری ہیں اور دونوں میں سیزفائر پر اتفاق ہے۔

بیرسٹر سیف کا کہنا تھا کہ طالبان نے ایم پی اے ملک لیاقت پر حملے اور مہمند میں دو نوجوانوں کے قتل میں ملوث ہونے سے انکار کیا ہے، مٹہ میں پولیس اہل کار بھتے کی اطلاعات پر تفتیش کے لیے گئے تھے جس دوران فائرنگ سے ایک ڈی ایس پی کو زخمی کیا گیا۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM