دنیا
25 جنوری ، 2023

افغانستان میں 15 روز کے دوران سردی سے 124 افراد جاں بحق

اس بار موسم سرما گزشتہ ایک دہائی کے مقابلے میں زیادہ شدید ہے جس سے 70 ہزار مویشی بھی جان سے جاچکے ہیں: میڈیا رپورٹس/ فوٹو اے ایف پی
اس بار موسم سرما گزشتہ ایک دہائی کے مقابلے میں زیادہ شدید ہے جس سے 70 ہزار مویشی بھی جان سے جاچکے ہیں: میڈیا رپورٹس/ فوٹو اے ایف پی

کابل: افغانستان میں شدید سردی اور گرتے ہوئے درجہ حرارت کے باعث گزشتہ 15 روز میں کم از کم 124  افراد جاں بحق ہوگئے۔

برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق افغانستان کی وزارت ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے ترجمان  نے بتایا کہ اس بار موسم سرما گزشتہ ایک دہائی کے مقابلے میں زیادہ شدید ہے جس سے 70 ہزار مویشی بھی جان سے جاچکے ہیں۔

میڈیا رپورٹس کےمطابق افغان طالبان کی جانب سے این جی او کے تحت کام کرنے والی خواتین پر پابندی کے بعد ملک میں متعدد  امدادی ایجنسیوں کی سرگرمیاں بھی معطل ہیں۔

اس موقع پر ایک حکومتی وزیر نے کہا کہ اموات کے باوجود احکامات میں کوئی تبدیلی نہیں کی جائے گی۔

ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے قائم مقام وزیر ملا محمد عباس اخوند نے بی بی سی سے گفتگو میں کہا کہ افغانستان کے بیشتر علاقوں میں شدید برف پڑی ہے جس کے باعث راستے منقطع  ہیں جب کہ امداد کے لیے فوجی ہیلی کاپٹر بھیجے گئے تھے لیکن پہاڑی علاقے ہونے کے باعث ہیلی کاپٹر کو لینڈ نہیں کیا جاسکا۔

قائم مقام وزیر کے مطابق اگلے 10 دنوں میں سردی کی شدت میں کمی کا امکان ہے لیکن وہ جانی نقصان کے حوالے سے فکر مند ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM