Election 2024 Election 2024

دنیا
Time 07 دسمبر ، 2023

'سب کو صرف پیسہ چاہیے'، 26 سالہ ڈاکٹر نے بھاری جہیز کی مانگ پر خودکشی کرلی

شاہانہ ڈاکٹر ای اے رویس نامی شخص کے ساتھ تعلقات میں تھیں اور دونوں نے شادی کرنے کا فیصلہ کیا تھا__فوٹو: بھارتی میڈیا
شاہانہ ڈاکٹر ای اے رویس نامی شخص کے ساتھ تعلقات میں تھیں اور دونوں نے شادی کرنے کا فیصلہ کیا تھا__فوٹو: بھارتی میڈیا

بھارتی ریاست کیرالہ میں 26 سالہ ڈاکٹر شاہانہ نے سسرال والوں کی طرف سے جہیز کی بھاری مانگ پر خودکشی کرلی۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق ڈاکٹر شاہانہ کی پسند کی شادی ہورہی تھی لیکن خوشیوں والے گھر میں اس وقت صفِ ماتم بچھ گئی جب شاہانہ کے بوائے فرینڈ نے شادی سے انکار کردیا کیونکہ شاہانہ کے گھر والے مطلوبہ جہیز نہیں دے سکتے تھے۔

پولیس نے لڑکے کے خلاف خودکشی پر اکسانے اور جہیز کی روک تھام کے قوانین کے تحت مقدمہ درج کر لیا ہے،اس کے علاوہ مرحومہ کے لواحقین کے بیانات قلمبند کر لیے گئے ہیں۔

مقامی میڈیا رپورٹس کے مطابق ڈاکٹر شاہانہ اپنی والدہ اور دو بہن بھائیوں کے ساتھ رہتی تھیں، اس کے والد دو سال پہلے انتقال کرگئے تھے۔

شاہانہ ڈاکٹر ای اے رویس نامی شخص کے ساتھ تعلقات میں تھیں اور دونوں نے شادی کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

لڑکی کے اہلخانہ نے الزام لگایا ہے کہ ڈاکٹر رویس کی فیملی نے جہیز میں 150 تولہ سونا، 15 ایکڑ زمین اور بی ایم ڈبلیو گاڑی کا مطالبہ کیا تھا، جب ڈاکٹر شاہانہ کے گھر والوں نے کہا کہ وہ مطالبہ پورا نہیں کر سکتے تو اس کے بوائے فرینڈ کے گھر والوں نے شادی منسوخ کردی۔

اس انکار کی وجہ سے شاہانہ کافی مایوس اور افسردہ تھی جس کے بعد اس نے خودکشی کرلی۔

لاش کے پاس سے ملنے والا نوٹ:

پولیس کے مطابق شاہانہ کی لاش کے پاس سے ایک نوٹ ملا جس میں اس نے لکھا تھا کہ 'ہر کسی کو صرف پیسہ اور دولت ہی چاہیے'۔

مزید خبریں :